چیف جسٹس ثاقب نثار دل میں تکلیف کے باعث ہسپتال میں داخل، انجیو پلاسٹی کی گئی

راولپنڈی(بول نیوز اردو) چیف جسٹس آف پاکستان میاں ثاقب نثار کو دل میں تکلیف کے باعث راولپنڈی انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی میں داخل کر دیا گیا جہاں ان کی انجیوپلاسٹی کی گئی۔

ہسپتال ذرائع کے مطابق مزید پتا چلا ہے کہ چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کو سینے میں تکلیف کے باعث آر آئی سی لایا گیا تھا، جہاں انجیوپلاسٹی کے بعد ان کی حالت اب خطرے سے باہر بتائی جارہی ہے۔ راولپنڈی انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی کے سربراہ میجر جنرل (ر) اطہر کیانی نے چیف جسٹس کا چیک اپ کیا۔

ہسپتال ذرائع کے مطابق مزید پتا چلاہے کہ چیک اپ کے دوران چیف جسٹس ثاقب نثار کے دل کی ایک شریان بند ہے، اس موقع پر ان کی فوری طور پر انجیوپلاسٹی کی گئی۔ انجیوپلاسٹی کے بعد انہیں مزید دیکھ بھال کے لیے اسپتال میں داخل کرلیا گیا ہے۔ سربراہ آر آئی سی جنرل (ر) اظہر کیانی کا کہنا تھا کہ چیف جسٹس ثاقب نثار کے دل کی بند شریان کو کھول دیا گیا ہے،اور انہیں کیتھ لیب سے وارڈ منتقل کردیا گیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں