کے پی کے کی مختلف جیلوں میں قیدیوں کو جان لیوا امراض لاحق

صوبہ خیبر پختونخواہ کی مختلف جیلوں میں درجنوں قیدیوں کے ایڈز اور ہیپاٹائٹس کے مرض میں مبتلا ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔

تفصیلات کے مطابق صوبہ پختونخواہ کی جیلوں میں قیدیوں کے ایڈز اور دیگر خطرناک امراض میں مبتلا ہونے کا انکشاف ہے اور خیبر پختونخواہ محکمہ جیل خانہ جات حرکت میں آگیا۔

حکام کا کہنا ہے کہ تین نئی بیماریوں کے ٹیسٹ کیے جائیں گے۔

حکام کی جانب سے جاری کردہ رپورٹ کے مطابق پختونخواہ کی جیلوں میں 12 قیدی ایڈز کی بیماری میں مبتلا ہیں، ان میں سے پشاور جیل میں 3، مردان میں 2، ڈیرہ اسمعٰیل خان، بنوں اور تیمر گرہ میں ایک ایک قیدی ایڈز کا شکار ہے۔

جیلوں میں مناسب سہولیات نہ ہونے کی وجہ سے ایڈز کے مریض کی تعداد میں اضافے کا خدشہ ہے۔ علاوہ ازیں جیلوں میں ہیپاٹائٹس سی میں مبتلا 96 قیدیوں کی موجودگی کا بھی انکشاف ہوا ہے۔

رپورٹ کے مطابق  پشاور سینٹرل جیل میں 29 قیدی ہیپاٹائٹس کا شکار ہیں۔ مردان میں 12، بنوں، ہری پور اور صوابی میں 6، 6، کوہاٹ میں 5، تیمر گرہ اور ڈگر کی جیلوں میں ایک، ایک قیدی ہیپاٹائٹس کا شکار ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں