بین الاقوامی

شمالی کوریا کے سربراہ خواتین سے بات کرتے ہوئے کیوں رو پڑے؟

شمالی کوریا کے سربراہ کم جانگ ان خواتین سے مزید بچوں کی پیدائش کی اپیل کرتے ہوئے رو پڑے اور زور دیا کہ پیدائش کی شرح میں کمی کو روکنا ہوگا۔

شمالی کوریا میں بچوں کی پیدائش کے تناسب میں انتہائی کمی ریکارڈ کی گئی، دارلحکومت پیانگ یانگ میں ماوں کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے سربراہ کم جانگ خواتین سے مزید بچے پیدا کرنے کی اپیل کرتے ہوئے روپڑے۔

شمالی کوریا کے رہنما نے کہا کہ خواتین کا فرض ہے کہ وہ قومی طاقت کو مضبوط کرنے کے لیے ملک کی پیدائش میں کمی کو روکیں۔

انھوں نے زور دیا کہ پیدائش کی شرح میں کمی کو روکنا ہوگا ساتھ ہی بچوں کی اچھی دیکھ بھال اور دیگر فرائض کو ہمیں ماؤں کے ساتھ مل کر نبھانے ہوں گے۔

خیال رہے شمالی کوریا میں ایک خاتون کے ہاں پیدا ہونے والے بچوں کی اوسط تعداد دو ہے۔

جنوبی کوریا کی حکومت کا کہنا ہے کہ شمالی کوریا کی شرح افزائش میں گزشتہ 10 سالوں سے مسلسل کمی واقع ہوئی ہے تاہم محدود اعدادو شمار کے باعث آبادی کے رحجانات کے بارے میں معلومات حاصل کرنا مشکل ہے۔

Related Articles

Back to top button