ناسا چاند پر ایک مرد اور عورت کو بھیجنے کی تیاری کر رہا ہے

ناسا چاند پر ایک مرد اور عورت کو بھیجنے کی تیاری کر رہا ہے

ناسا چاند پر ایک مرد اور عورت کو بھیجنے کی تیاری کر رہا ہے تاکہ وہاں انسانوں کی آباد کاری کیلئے حالات کا جائزہ لیا جائے۔ ناسا 2024 میں اپنے پہلے مشن میں خاتون کو چاند پر روانہ کرے گا اور اس کے بعد مرد کو بھیجا جائے گا۔

تعمیراتی اداروں کے مطابق چاند کی سطح پر گھر بنانے میں چالیس ملین ڈالر لاگت آئے گی۔ تفصیلات کے مطابق چاند پر بنائے گئے گھر کا ماہانہ کرایہ3 لاکھ25 ہزار67 ڈالر ہوگا۔

کمپنیز کا کہنا ہے کہ چاند پر رہنے کے لیے گرین ہاؤسز اور سولر پینلز کی ضرورت ہوگی۔ گھر کی تعمیر پر40 ملین ڈالر خرچ آئے گا۔

چاند پر زندگی گزارنے کا خیال تو دلچسپ ہے لیکن یاد رہے وہاں آپ کو مختلف حالات کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ چاند پر آپ کو ایسے ذرائع درکار ہوں گے جن کی مدد سے توانائی حاصل کرسکیں۔

چاند پر بجلی پیدا کرنے کیلئے آپ کو ایک چھوٹا سا نیوکلیئر ری ایکٹر بھی ساتھ لے جانا ہوگا جس کی قیمت 1.3 بلین ڈالر ہے۔

متبادل کے طور پر آپ34 سولر پینل بھی ساتھ لے جاسکتے ہیں جو ایک گھر چلانے کیلئے کافی ہوں گے۔ سولر پینل کی لاگت23 ہزار616 ڈالر بنتی ہے۔

چاند پر رہائش اختیار کرنے سے قبل آپ کو وہاں رہنے اور سبزیاں اگانے کے طریقے بھی سیکھنے ہوں گے۔ چاند پر7 گھروں میں28 لوگوں کو1100 کلو خوراک اگانی ہوگی۔

چار افراد پر مشتمل ایک گھر کو سال میں5.9 ٹن پانی درکار ہوگا جس کو خوراک اگانے اور دیگر امور کیلئے استعمال کیا جا سکے گا۔

ناسا کے مطابق چاند کے جس حصے پر سورج کی روشنی پڑتی ہے وہاں پانی تو ہے لیکن گلہ بانی کیلئے استعمال نہیں کیا جاسکتا۔ ماہرین کے مطابق پانی کے مسئلے کا حل یہی ہے کہ استعمال شدہ پانی کو فلٹر کیا جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں