برج خلیفہ جتنا سیارچہ اتوار کے روز زمین کے پاس سے گزرے گا: ناسا

برج خلیفہ جتنا سیارچہ اتوار کے روز زمین کے پاس سے گزرے گا: ناسا

امریکی خلائی ایجنسی ناسا نے کہا ہے کہ اس اتوار کے روز زمین کے مدار کے قریب سے ایک سیارچہ تیز رفتاری سے گزرے گا جس کا سائز برج خلیفہ جتنا ہوگا، سیارچے کو باآسانی دیکھا بھی جاسکے گا۔

امریکی خلائی ایجنسی ناسا کے مطابق رواں برس کے اختتام سے پہلے خلا سے 5 سیارچے زمین کے قریب سے گزریں گے۔

خبررساں ادارے کے مطابق اتوار 29 نومبر کو برج خلیفہ کے حجم کے برابر ایک سیارچہ گرینچ کے وقت کے مطابق صبح10بج کر 9 منٹ پر زمین کے قریب سے گزرے گا۔

ناسا کا کہنا ہے کہ اس سیارچے کی رفتار 25.07 کلومیٹر فی سیکنڈ ہوگی اور انتہائی تیز رفتاری سے کرہ ارض کے قریب سے گزرے گا، اسے دور بین کے بجائے آنکھ سے بھی دیکھا جاسکتا ہے اس کے علاوہ پیر اور منگل کو تین مزید سیارچے زمین کے قریب سے گزریں گے۔

ناسا کے مطابق پہلے سیارچے کا قطر 9.5 میٹر، دوسرے کا 14 میٹر جبکہ تیسرے کا قطر 10 میٹر کے قریب ہوگا۔ بعد ازاں منگل کے روز کرہ ارضی کے قریب ایک چوتھے سیارچے کا گزر ہوگا جس کا قطر 47 میٹر ہوگا۔

ناسا اور فلکی علوم سے دلچسپی رکھنے والے بین الاقوامی ادارے چٹانوں اور سیارچوں کا زمین کے قریب سے گزرنے کو غیر معمولی واقعہ قرار دے رہے ہیں۔ مذکورہ سیارچوں کا نظارہ کرنے کے لیے خصوصی اہتمام کیا جا رہا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں