کھیلوں کی خبریں

نیوزی لینڈ نے نمیبیا کو 52 رنز سے شکست دے دی

ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کے گروپ ٹو کے ایک اہم میچ میں نیوزی لینڈ نے نمبیبیا کو 164 رنز کا ہدف دینے کے بعد میچ باآسانی 52 رنز سے جیت کر دو قیمتی پوائنٹس حاصل کرلیا۔

شارجہ میں کھیلے جارہے میچ میں نمیبیا نے ٹاس جیت کر نیوزی لینڈ کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی۔

نیوزی لینڈ نے محتاط انداز میں بیٹنگ شروع کی اور دونوں اوپنرزنے 4 اوورز میں 30 رنز کی شراکت قائم کی۔

مارٹن گپٹل 18 گیندوں پر 18 رنز بنا کر ویزے کو وکٹ دے گئے، انہوں نے ایک چوکا اور ایک چھکا لگایا تھا۔

ڈیرل مچل بھی بڑی اننگز کھیلنے میں ناکام رہے اور 15 گیندوں پر 19 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئے۔

کیوی کپتان کین ولیمسن نے ڈیون کونوے کے ساتھ مل کر تیسری وکٹ کے لیے اچھی شراکت کی لیکن ایراسمس نے ان کی 28 رنز کی اننگز 81 کے مجموعے پر سمیٹ لی۔

ڈیوڈ کونوے آؤٹ ہونے والے آخری بلےباز تھے، انہوں نے 18 گیندوں کا سامنا کیا اور 17 رنز بنا کر ایراسمس اور بیرکنسٹوک کے گٹھ جوڑ سے رن آؤٹ ہوئے۔

گلین فلیپس اور جیمز نیشام نے جارحانہ انداز اپنایا اور ٹیم کو ایک معقول مجموعے کی طرف گامزن کردیا اور دونوں بلے بازوں نے مقررہ اوورز میں مزید کوئی وکٹ گرنے کا موقع فراہم نہیں کیا۔

نیوزی لینڈ نے مقررہ اوورز میں 4 وکٹوں پر 163 رنز بنا لیے۔

فلیپس نے 21 گیندوں پر ایک چوکے اور 3 چھکوں کی مدد سے 39 رنز بنائے۔

نیشام کی 35 رنز کی اننگز 23 گیندوں پر ایک چوکے اور 2 چھکوں پر مشتمل تھی۔

نمیبیا کے اوپنرز نے ہدف کے تعاقب میں اچھا آغاز کیا اور شراکت میں 47 رنز بنائے۔

مائیکل وین لینگین 25 گیندوں پر 2 چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے 25 رنز بنا کر آؤٹ ہونے والے پہلے بلے باز تھے۔

اسٹیفن بارڈ 21 رنز بنائے، سینیٹرنے ان کی وکٹیں اڑا دیں تو نمبیبیا کا اسکور 51 رنز تھا۔

کپتان ایراسمس بھی زیادہ دیر وکٹ پر ٹھہر نہیں سکے اور 55 کے اسکور پر ٹم ساؤدھی کو وکٹ دے کر واپس ہوگئے۔

نمیبیا کی ٹیم مقررہ اوورز میں 7 وکٹوں پر 111 رنز بنا سکی۔

دونوں ٹیمیں ان کھلاڑیوں پر مشتمل ہیں:

نیوزی لینڈ: کین ولیمسن(کپتان)، مارٹن گپٹل، ڈیرل مچل، ڈیون کونوے، گلین فلپس، جیمز نیشام، مچل سینٹنر، ٹم ساؤدھی، ٹرینٹ بولٹ، اش سودھی، ایڈم ملنے

نمیبیا: جیرہارڈ ایراسمس (کپتان)، اسٹیفن بارڈ، مائیکل وین لنگن، کریگ ولیمز، ڈیوڈ ویزے، جے جے اسمٹ، جین نیکول لوفٹی ایٹون، زین گرین، کارل برکین اسٹاک، روبن ٹرمپیل مین، برنارڈ اسکولز

Related Articles

Back to top button