کھیلوں کی خبریں

ٹی 20 ولڈ کپ: انگلینڈ نے آسٹریلیا کو8 وکٹوں سے شکست دے دی

ٹی20 ورلڈ کپ میں باؤلرز کی شاندار کارکردگی اور جوز بٹلر کی جارحانہ بیٹنگ کی بدولت انگلینڈ نے آسٹریلیا کو یکطرفہ مقابلے کے بعد 8 وکٹوں سے شکست دے دی۔ دبئی میں کھیلے گئے سپر 12 راؤنڈ کے میچ میں انگلینڈ کے کپتان اوئن مورگن نے ٹاس جیت کر آسٹریلیا کو بیٹنگ کی دعوت دی۔

آسٹریلیا نے اننگز کا آغاز کیا تو انہیں ابتدا سے ہی مشکلات کا سامنا کرنا پڑا اور 7 کے اسکور پر ڈیوڈ وارنر پویلین لوٹ گئے۔

اسٹیو اسمتھ ایک مرتبہ پھر بڑی اننگز نہ کھیل سکے اور کرس ووکس کے شاندار کیچ کے سبب ایک رن بنا کر چلتے بنے جبکہ گلین میکسویل آؤٹ ہوئے تو آسٹریلیا کی ٹیم 15 رنز پر تین وکٹیں گنوا چکی تھی۔

آسٹریلین ٹیم ابھی ان نقصانات سے سنبھلی بھی نہ تھی کہ 21 کے مجموعی اسکور پر مارکس اسٹوئنس بغیر کوئی رنز بنائے عادل رشید کی وکٹ بن گئے۔

اس مرحلے پر کپتان ایرون فنچ کا ساتھ دینے میتھیو ویڈ آئے اور دونوں نے 30 رنز کی شراکت قائم کر کے ٹیم کی نصف سنچری مکمل کرائی، 51 کے مجموعے پر ویڈ کی اننگز بھی اختتام کو پہنچی۔

مشکل وقت میں ایشٹن ایگار نے کپتان فنچ کے ہمراہ مزید 47 رنز جوڑ کر ابتدائی نقصان کا ازالہ کرنے کی کوشش کی لیکن انگلش باؤلرز نے کسی بھی موقع پر آسٹریلین بلے باز کو کھل کر کھیلنے کا موقع فراہم نہ دیا۔

ایشٹن ایگار 20 رنز بنانے کے بعد آؤٹ ہوئے جبکہ آسٹریلین کپتان فنچ 46 رنز بنانے بعد پویلین لوٹ گئے۔

آسٹریلین ٹیم مقررہ اوورز میں 125 رنز بنا کر ڈھیر ہو گئی۔

انگلینڈ کی جانب سے کرس جورڈن 3 وکٹیں لے کر سب سے کامیاب باؤلر رہے جبکہ کرس ووکس اور ٹائمل ملز نے دو، دو وکٹیں حاصل کیں۔

ہدف کے تعاقب میں اوپنرز جیسن روئے اور جوز بٹلر نے ٹیم کو پاور پلے میں 66رنز کا عمدہ آغاز فراہم کیا خصوصاً جوز بٹلر نے جارحانہ انداز اپنایا۔

آسٹریلیا کو پہلی کامیابی اس وقت ملی جب روئے 22 رنز بنانے کے بعد ایڈم زامپا کی وکٹ بن گئے۔

دوسرے اینڈ سے بٹلر نے جارحانہ بیٹنگ کرتے ہوئے ہدف کی جانب پیش قدمی کا سلسلہ جاری رکھا تاہم انگلینڈ کی سنچری سے قبل ڈیوڈ ملان 8 رنز بنانے کے بعد پویلین لوٹ گئے۔

اس کے بعد انگلینڈ نے 12ویں اوور میں باآسانی ہدف تک رسائی حاصل کر کے 8وکٹوں سے فتح حاصل کر لی۔

جوز بٹلر نے 32 گیندوں پر 5 چھکوں اور 5 چوکوں کی مدد سے 71 رنز کی اننگز کھیلی جبکہ جونی بیئراسٹو نے 16 رنز بنائے۔

آسٹریلیا کی جانب سے ایشٹن ایگار اور ایڈم زامپا نے ایک، ایک وکٹ حاصل کی۔

17 رنز کے عوض 3 وکٹیں لینے پر انگلینڈ کے کرس جورڈن کو بہترین کھلاڑی دیا گیا۔

واضح رہے کہ میچ کے لیے آسٹریلیا نے اپنی ٹیم میں ایک تبدیلی کی تھی اور مچل مارش کی جگہ ایشٹن ایگار کو فائنل الیون کا حصہ بنایا تھا۔

 

Related Articles

Back to top button