کھیلوں کی خبریں

کرکٹ لیگز کی وجہ سے کھلاڑیوں کی انٹرنیشنل کرکٹ میں دلچسپی ختم

جنوبی افریقہ کے سابق کپتان فاف ڈیوپلیسی نے کہا ہے دنیا بھر میں کرکٹ لیگز مضبوط ہورہی ہیں اور یہ حقیقت ہے کہ کھلاڑیوں کی بین الاقوامی کرکٹ میں دلچسپی ختم ہوگئی ہے۔

ورچوئل پریس کانفرنس کرتے ہوئے فاف ڈیوپلیسی نے کہا کہ پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) 6 مارچ میں ملتوی ہونے کے بعد اب دوبارہ آغاز ہو رہا ہے جو خوشی کا باعث ہے۔

خیال رہے کہ رواں برس مارچ میں پی ایس ایل حکام نے متعدد کھلاڑیوں اور اسٹاف کے کورونا ٹیسٹ مثبت آنے کے بعد بقیہ میچز ملتوی کردیئے تھے اور اب پی ایس ایل 6 کا متحدہ عرب امارات میں دوبارہ آغاز ہونے جا رہا ہے۔

جنوبی افریقہ کے سابق کپتان فاف ڈیوپلیسی نے کہا کہ مجھے خوشی ہے کہ پی ایس ایل میں دوبارہ کھیلنے کا موقع مل رہا ہے تاہم یہاں کنڈیشنز مختلف ہیں لیکن تمام ٹیمیں تازہ دم ہیں۔

کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کی نمائندگی کرنے والے مشہور بلے باز نے کہا کہ ان کی ٹیم ٹیبل پر اس پوزیشن پر نہیں ہے جہاں اس کو ہونا چاہیے۔

ان کا کہنا تھا کہ ‘میں ٹیم کے اندر جونیئر کھلاڑیوں کے ساتھ اپنے تجربات شیئر کرنے کی کوشش کروں گا’۔

انہوں نے کہا کہ وہ پی ایس ایل میں سامنے آنے والے باؤلنگ ٹیلنٹ سے متاثر ہوئے ہیں اور تمام ٹیموں کے پاس بہترین باؤلرز کی فہرست ہے۔

کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کے کپتان کی تعریف کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ سرفراز احمد میدان میں ہمیشہ اپنے ساتھی کھلاڑیوں کی حوصلہ افزائی کرتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ‘ہر کپتان کا اپنا الگ انداز ہوتا ہے اور سرفراز کے سوچنے کا انداز بھی مختلف ہے’۔

فاف ڈیوپلیسی نے کہا کہ میرا ماننا ہے کہ ویسٹ انڈیز اور بھارت ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کی فیورٹ ٹیمیں ہیں۔

یاد رہے کہ ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ رواں برس اکتوبر میں متحدہ عرب امارات (یو اے ای) میں شیڈول ہے۔

انہوں نے کہا کہ ورلڈ کپ میں ٹیموں کی تعداد میں اضافے سے عمومی طور پر کھیل کو فائدہ ہوگا۔

ڈیوپلیسی نے کہا کہ یہ بات غلط ہے کہ صرف سپر فٹ کرکٹرز ہی اچھے کھلاڑی بنتے ہیں۔

Related Articles

Back to top button