کھیلوں کی خبریں

پلے آف میں پشاور زلمی کو شکست، ڈیرن سیمی کا اہم بیان

پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) کی ٹیم پشاور زلمی کے ہیڈ کوچ ڈیرن سیمی نے کہا ہے کہ 9 پلے آف میں ایک ٹرافی جیتنا کافی نہیں، ہمیں اور جیتنا چاہیے تھی، اگر ٹرافی نہیں جیتے تو ہر سال پلے آف کھیلنے کی کوئی اہمیت نہیں۔

میچ کے بعد پریس کانفرنس کرتے ہوئے ڈیرن سیمی نے کہا کہ اس وکٹ پر ہم نے 15-20 رنز کم بنائے تھے، جیسا آغاز ہوا اس کے بعد 200 کا ہدف ذہن میں تھا، ہم نے بولنگ میں بھی ابتدا کے 10 اوور میں اچھا کھیلا بعد میں نہ کرسکے۔

انہوں نے کہا کہ میں نے آج ٹیم سے پوچھا اسلام آباد کی صلاحیت کیا ہے تو ٹیم نے کہا کہ وہ کم بیک کرتی ہے، ہم نے ابتدائی 10 اوور کے بعد اسلام آباد کو کم بیک کا موقع دیا۔

ڈیرن سیمی کا کہنا تھا کہ اسلام آباد نے اچھی اننگز کھیلی، عماد وسیم اور حیدر علی نے بہت زبردست کھیل پیش کیا۔

اپنی ٹیم کی مجموعی پرفارمنس سے متعلق بات چیت کرتے ہوئے پشاور زلمی کے ہیڈ کوچ کا کہنا تھا کہ یہ پشاور زلمی کی روایتی کرکٹ نہیں تھی، ہم نے بولنگ میں غلطیاں کیں، تسلسل کی کمی رہی، بولنگ پلان کے مطابق نہیں ہوسکی تھی، اسلام آباد جیسی ٹیم کو زیر کرنے کیلئے ان کو اٹھنے کا موقع نہیں دینا چاہیے۔

اپنی پریس کانفرنس کے دوران پاکستان میں کرکٹ کی واپسی پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے ڈیرن سیمی کا کہنا تھا کہ پاکستان میں کرکٹ کی واپسی پر بہت خوش ہوں، امید ہے فائنل میں کراچی میں بڑا کراؤڈ آئے گا، پاکستان میں کراؤڈ کا جوش و جذبہ ہمیشہ انجوائے کیا ہے۔

ڈیرن سیمی کا کہنا تھا کہ بابر رنز کرسکتا ہے لیکن بولرز کو اسکا دفاع کرنا ہے، مجھے پورا یقین ہے کہ بابر بہترین لیڈر ہے، ہماری ایک دوسرے کے ساتھ گفتگو چلتی رہتی ہے۔

Related Articles

Back to top button