پاکستانی خبریں

شمالی وزیرستان میں دہشت گردوں سے فائرنگ کے تبادلے میں پاک فوج کا سپاہی شہید

خیبرپختونخوا (کے پی) کے ضلع شمالی وزیرستان کےعلاقے شیوا میں دہشت گردوں نے پاک فوج کی پوسٹ پر فائرنگ کی، جس کے نتیجے میں ایک جوان شہید ہوگیا۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) سے جاری بیان کے مطابق فوجی پوسٹ پر دہشت گردوں کی فائرنگ کا پاک فوج کے جوانوں نے مؤثر جواب دیا اور دہشت گردوں سے مقابلہ کیا۔

بیان میں کہا گیا کہ فائرنگ کے تبادلے کے دوران 32 سالہ نائیک نور مرجان شہید ہوگئے، جن کا تعلق کرم سے تھا۔

آئی ایس پی آر نے بتایا کہ علاقے کو دہشت گردوں سے پاک کرنے کے لیے آپریشن کیا جارہا ہے۔

خیال رہے کہ 18 دسمبر کو سیکیورٹی فورسز نے خیبرپختونخوا کے مختلف علاقوں میں دو الگ الگ کارروائیوں کے دوران کالعدم تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) کے سرکردہ رہنما مولوی فقیر محمد کے ساتھی سمیت 3 دہشت گردوں کو ہلاک کردیا تھا۔

آئی ایس پی آر سے جاری بیان میں کہا گیا تھا کہ ضلع باجوڑ میں خفیہ اطلاع پر کالعدم ٹی ٹی پی کے مولوی فقیر محمد کے قریبی ساتھی غفور عرف جلیل کو کارروائی کے دوران نشانہ بنایا گیا۔

بیان میں کہا گیا تھا کہ کالعدم ٹی ٹی پی کے غفور دہشت گردی کے کئی واقعات میں ملوث تھا اور اس کارروائی کے دوران فائرنگ کے تبادلے پر سیکیورٹی فورسز کا ایک اہلکار بھی زخمی ہوا۔

آئی ایس پی آر نے بتایا تھا کہ ضلع شمالی وزیرستان کے علاقے بویا میں ایک اور کارروائی کے دوران مزید دو دہشت گردوں کو ہلاک کردیا گیا۔

اس سے قبل 27 نومبر کو شمالی وزیرستان کے علاقے دتہ خیل میں پاک فوج کی پوسٹ پر دہشت گردوں کے حملے کے نتیجے میں دو اہلکار شہید ہوگئے تھے۔

Related Articles

Back to top button