پاکستانی خبریں

ابھی الیکشن کا وقت نہیں، نہ الیکشن کی تیاریاں شروع ہیں: شاہ محمود قریشی

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے اپوزیشن جماعتوں پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) بیرونی ایجنڈے پر کام کررہی ہے، لانگ مارچ ہو یا شارٹ مارچ ہم گھبرانے والے نہیں ہیں۔

وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے ملتان میں اپنے حلقے میں ترقیاتی منصوبوں کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پی ڈی ایم بیرونی ایجنڈے پر کام کررہی ہے، پی ڈی ایم کی جماعتیں فیڈریشن مخالف ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ پی ڈی ایم میں شامل جماعتوں کا نہ تو کوئی نظریہ ہے اور نہ کوئی ایجنڈا ہے، لانگ مارچ ہو یا شارٹ مارچ گھبرانے والے نہیں ہیں۔

انہوں نے کہا کہ پی ڈی ایم احتجاج اور مارچ کا شوق پورا کرے، ماضی کی تحریکوں کی طرح اس دفعہ بھی پی ڈی ایم کو مایوسی ہوگی اور حکومت گرانے کی خواہش محض خواہش ہی رہے گی۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) واحد سیاسی جماعت ہے جو وفاق کی حامی اور قومی سیاسی جماعت ہے، جس کا ایجنڈا قومی اور جس کی جڑیں پورے ملک میں پھیلی ہوئی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ حکومت اپنی آئینی مدت پوری کرےگی، اسمبلی سے باہر بیٹھنے والے وقت کا انتظار کریں کیونکہ 2023کے انتخابات میں بھی پی ٹی آئی اقتدار میں آئے گی۔

ان کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی کو ملک کی کمزور معیشت ورثے میں ملی، اقتدار ملا تو خزانہ خالی اور ملک قرضوں میں ڈوبا ہوا تھا اور ملک کو اندرونی اور بیرونی سطح پر بحرانوں کا سامنا تھا۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ اب بھی ہمارے سامنے بہت سے چیلنجز ہیں، جن کا ہم نے مقابلہ کرنا ہے، مہنگائی بھی ہمارے لیے ایک بہت بڑا چیلنج ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ مہنگائی ایک عالمی مسئلہ ہے،کورونا کے بعد پوری دنیا اس وقت مشکلات میں ہے، سب کو مہنگائی کے چیلنجز کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے، صرف پاکستان میں اس کا تاثر دینا غلط ہے۔

انہوں نے کہا کہ عالمی سطح پر پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ اور اشیائے خوردونوش کی چیزوں کی قیمتوں میں اضافے کا اثر پاکستان میں بھی ہوا ہے۔

مہنگائی پر بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ اس وقت ہماری پہلی ترجیح عوام کو عالمی سطح پر مہنگائی کے رجحان کے اثرات سے بچانا ہے اور اس کے لیےحکومت کوئی کسر اٹھا نہیں رکھے گی۔

ان کا کہنا تھا کہ ہم موجودہ حالات سے ہرگز مایوس نہیں بلکہ مشکل کی گھڑی سے تقویت لے کر سر خرو ہوں گے، حکومت مشکل معاشی حالات کے باوجود مثبت پیش رفت کر رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان میں معاشی ترقی میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ابھی الیکشن کا وقت نہیں، نہ الیکشن کی تیاریاں شروع ہیں۔

شاہ محمود قریشی نے کہاکہ وزیراعظم عمران خان کی خواہش ہے کہ پاکستان کا ہر شہری سر اٹھا کر چلے، وہ پاکستان کے نوجوانوں کو ایک اچھا مستقبل فراہم کرنا چاہتے ہیں، ان کی خواہش ہے پاکستان کا ہر شہری برسرروزگار ہو اور خود کما کر اپنی اور اپنے خاندان کی کفالت کرے۔

انہوں نے کہا کہ کامیاب جوان پروگرام کے تحت 23 ارب روپے مالیت کے قرضے نوجوانوں میں تقسیم کیے گئے ہیں، اس کا مقصد نوجوانوں کی حوصلہ افزائی اور انہیں ایک اچھا مستقبل فراہم کرنا ہے۔

حکومتی اقدامات کی تعریف کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ وزیراعظم ریلیف پیکیج کے تحت احساس پروگرام کے ذریعے عوام کو اربوں روپے کا ریلیف فراہم کیا جائے گا اور ایک محتاط اندازے کے مطابق دو کروڑ سے زائد افراد اس پیکیج سے مستفید ہوں گے۔

Related Articles

Back to top button