پاکستانی خبریں

وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال نے مستعفی ہونے کی تردید کردی

وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال نے اپنے مستعفی ہونے سے متعلق خبروں کی تردید کردی ہے۔

جام کمال نے اپنی ٹوئٹ میں کہا ہے کہ میں نے استعفیٰ نہیں دیا، ہمیں اپنی اور اتحادیوں جماعتوں (بی اے پی، پی ٹی آئی، اے این پی، ہزارہ ڈیموکریٹک پارٹی، جمہوری وطن پارٹی ، پیپلز پارٹی، آزاد ارکان اور بی این پی عوامی) کے 41 ارکان کی حمایت حاصل ہے، عددی لحاظ سے ہمیں ایوان کے 80 فیصد ارکان کی حمایت حاصل ہے۔

دوسری جانب گورنر بلوچستان نے بھی کہا ہے کہ انہیں اب تک وزیراعلیٰ جام کمال کا استعفیٰ نہیں ملا۔

اس سے قبل یہ خبریں آئی تھیں کہ وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال نے گورنر سید آغا ظہور کو اپنا استعفیٰ بھجوا دیا ہے۔

جام کمال کے استفعے کی خبریں منظر عام پر آنے سے قبل ان سے چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی اور وزیر دفاع پرویز خٹک نے ملاقات کی تھی، اس موقع پر جام کمال کے حامی ارکان اسمبلی اور دیگر ساتھی بھی موجود تھے۔

واضح رہے کہ چند روز قبل بلوچستان اسمبلی میں بلوچستان عوامی پارٹی کے ناراض اراکین اور اپوزیشن کی جانب سے وزیراعلیٰ بلوچستان کے خلاف تحریک عدم اعتماد پیش کی گئی تھی، 65 رکنی ایوان میں سے 33 نے تحریک کے حق میں ووٹ دیا تھا۔ تحریک عدم اعتماد پر رائے شماری 25 اکتوبر کو ہونا تھی۔

Related Articles

Back to top button