پاکستانی خبریں

ایک سال کے دوران بی آر ٹی پشاور کو 1 ارب 88 کروڑ روپے کا خسارہ

بس ریپڈ ٹرانزٹ (بی آر ٹی) کو پچھلے مالی سال کے دوران ایک ارب 88 کروڑ روپے کے خسارے کا سامنا کرنا پڑا۔

بی آر ٹی کو دو سالوں میں مجموعی طور پر 4 ارب 67 کروڑ اور 33 لاکھ روپے کا نقصان اٹھانا پڑا جبکہ رواں مالی سال کے دوران بی آر ٹی کو 2 ارب 79 کروڑ روپے کے خسارے کا تخمینہ لگایا گیا ہے۔

پچھلے مالی سال کے 10 ماہ میں بی آر ٹی کو ایک ارب 92 کروڑ روپے کے اخراجات کا سامنا ہوا جب کہ رواں مالی سال کے دوران اخراجات کا تخمینہ 2 ارب 96 کروڑ روپے لگایا گیا ہے۔

بی آر ٹی کو مسافروں سے ٹکٹوں کی مد میں صرف 3 کروڑ 99 لاکھ روپے وصول ہوئے اور اسے ٹکٹوں کی فروخت سے 12 کروڑ 16 لاکھ 43 ہزار روپے کی آمدن متوقع ہے۔

دوسری جانب صوبائی وزیر ٹرانسپورٹ شاہ محمد وزیر نے خسارے کی وجہ بسوں کے کم کرائے کو قرار دیا ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ ہم نے وزیراعظم عمران خان کی ہدایت پر کرائے کم رکھے ہیں، کرائے بڑھانے سے عوام پر بوجھ پڑے گا۔

صوبائی وزیر ٹرانسپورٹ کا یہ بھی کہنا ہے کہ شہر میں پلازوں کی تعمیر سے خسارے میں کمی ہوگی۔

Related Articles

Back to top button