پاکستانی خبریں

غیرپارلیمانی زبان استعمال کرنے والوں کو ایوان میں جانے کی اجازت نہیں ملے گی، اسپیکر

اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے اعلان کیا ہے کہ قومی اسمبلی میں غیرپارلیمانی زبان استعمال کرنے والوں کو ایوان میں جانے کی اجازت نہیں ملے گی۔

انہوں نے کہا قومی اسمبلی میں ہونے والی ہنگامہ آرائی کی تحقیقات کرائی جائیں گی۔ اجلاس کے دوران حزب اختلاف اور حکومتی ارکان نے غیرپارلیمانی رویہ اپنایا، نازیبا زبان استعمال کی جو قابل مذمت اور مایوس کن ہے۔

اسد قیصر نے قومی اسمبلی کا اجلاس آج دوپہر 2 بجے ہوگا طلب کیا ہے۔ ایوان میں ہنگامہ آرائی کےواقعات کی مکمل تحقیقات کرائی جائے گی۔

پاکستان کی قومی اسمبلی میں منگل کو ہونے والا اجلاس ہنگامہ آرائی کی نذر ہو گیا جس میں اپوزیشن اور حکومتی ارکان باہم دست و گریباں نظر آئے۔

قبل ازیں پیر کو بھی اجلاس کے دوران شور شرابہ دیکھنے میں آیا تھا لیکن منگل کو ایوان میں ہونے والی ہنگامہ آرائی کے بعد قومی اسمبلی کا اجلاس بدھ تک کے لیے ملتوی کر دیا گیا۔

 

Related Articles

Back to top button