پاکستانی خبریں

زمین کے عالمی دن کے مناسبت سے انٹرنشنل کانفرنس، زمین کی اہمیت پر گفتگو

اسلام آباد میں یوتھ کونسل پاکستان کے زیر اہتمام زمین کے عالمی دن کے مناسبت سے ایک انٹرنشنل کانفرنس کا انعقاد کیا گیا۔ اس کانفرنس میں برطانیہ، اسپین اور دوسرے ممالک سے مقرین کو مدعو کیا گیا تاکہ وہ پاکستان کے نوجوان نسل کو زمین کے اہمیت اور اس دن منانے کے مقصد سے آگاہ کرے۔

سنیٹر رحمان ملک اس کانفرنس کے مہمان خصوصی تھے ان نے اقوام متحدہ جیسے عالمی تنظموں کے بارے میں اپنے تحفظات کا اظہار کیا اور مطالبہ کیا کہ ہمارے ماحول کو بچانے کے لیے ان تنظیموں کو قانون سازی کرنی چاہیے۔ انھوں نے مزید کہا کہ نوجوان ہی اصل کردار ادا کرسکتے ہیں اور زمین کو سبزے کے زریعے خراب ہونے سے بچا سکتے ہیں،

اس موقع پر قومی وزیر برائے پارلیمانی امور علی محمد خان نے بھی کانفرنس سے اپنا اظہار خیال کیا اور حکومتی اقدامات سے آگاہ کیا جو ماحول کو بچانے کے لئے اٹھائے گئے ہیں۔

چیئرمین کشمیر کمیٹی شہریار آفریدی نے کانفرنس میں زمین کے عالمی دن کے حوالے سے گفتگو کی اور بتایا کہ جس طریقے سے حکومت پاکستان قدرتی ماحول کو بچانے میں مصروف ہیں اب دنیا کےلیے مثال بن گئی۔

بین الاقوامی مقررین میں سے ڈینیئل ڈیل ویلے جو کہ انٹرنیشنل یونیورسٹی سرکل آف سپین کہ سیکٹری جنرل ہے انھوں نے کہا کہ وہ لوگ قابل قدر ہیں جو زمین کے ماحولیات کو بچانے کے لیے اپنا کردار ادا کرتے ہیں ان کا مزید کہنا تھا کہ ہمیں مایوسی کا شکار نہیں ہونا چاہے۔

سالک سابق پرائیویٹ سیکٹری چیف آف آرمی سٹاف جنرل سمریز نے کانفرنس میں اپنے تاثرات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے ایک بہت ہی خطرناک کردار قدرت کو تباہ کرنے میں ادا کیا ہے، ان کا کہنا تھا کہ ہر بندہ درخت لگانا شراع کرے۔

لیکچرر ںیشنل ڈیفنس یونیورسٹی اسلام آباد شمائلہ ظہور نے میڈیا کی اہمیت اور اس کی طاقت سے تفصیلی آگاہ کیا کہ کس طرح میڈیا زمین کو ماحولیاتی خرابی سے بچانے میں اپنا کردار ادا کرسکتا ہے انھوں نے مزید بتایا کہ میڈیا تو لوگوں کو آگاہ کررہا لیکن شعور دینے سے قاصر ہے۔

چئیرمین انترنیشنل ہیومین رائٹس کے سفیر ڈاکٹر شاہد امین خان نے کانفرنس کے شرکا سے خطاب کے دروان بتایا کہ صاف ماحول ہر انسان کا بنیادی حق ہے جس کا تعین اقوام متحد نے کیا ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ ماحولیاتی تبدیلی نوجوانوں کا ہی اصل مسئلہ ہے اور ویوے بھی دنیا کی آبدی کا زیادہ حصہ نوجوانوں پر مشتمل ہے لحاظہ وہ ایک بہت کردار ادا کرسکتے ہیں اور ان کو کردار ادا کرنا چاہے۔

 اسپین میں یونیسف کی سفیر لوسیا پیریز نے شرکاء کو بتایا کہ صاف ماحول کے بارے میں شعور پیدا کرنے کے لیے زمین کا عالمی دن منانا انتہائی ضروری ہے۔

لیکچرر قائد اعظم یونیورسٹی ڈاکٹر منیبہ جدون نے کانفرنس کے شرکاء سے اپنے اظہار خیال کے دروان چند اہم نکات کے حوالے سے بات کی جیسا کہ قابل تجدید تونائی، کیمیکل تبدیلی وغیرہ۔

اینکر پرسن سلمٰئ کوثر نے کانفرنس میں اظہار خیال کے دوران بتایا کہ ماحولیاتی تبدیلی عام آدمی کا مسئلہ ہے لیکن بدقسمتی سے عام آدمی اس کو توجہ نہیں دیتا۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ یہ ایک اہم مسئلہ ہے جس کے بارے میں شعور اجاگر کرنے کی ضرورت ہے۔

عنا عروج نے کانفرنس اپنے اظہار خیال میں بتایا کہ تعلیم ہی ایک ایسی چیز ہے جو انسان میں مثبت تبدیل لا سکتی ہے۔ ہمیں زمین کے ماحول کو بچانے کے لیے عام لوگوں کو آگاہ کرنا ہوگا۔

آخر میں وائی سی پی کے صدر محمد شہزاد خان نے عالمی سطح پر ماحولیاتی تبدیلی کے حوالے سے آٹھائے جانے والے اقدامت کو سرہا۔

Related Articles

Back to top button