تحریک انصاف کے کارکنان نے ن لیگی رہنما احسن اقبال کے سر پر جوتا مارا

تحریک انصاف کے کارکنان نے ن لیگی رہنما احسن اقبال کے سر پر جوتا مارا

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے کارکنان نے ن لیگی رہنما احسن اقبال کے سر پر جوتا دے مارا۔مسلم لیگ ن کے سیکرٹری جنرل احسن اقبال دیگر ن لیگی رہنماؤں کے ہمراہ پارلیمنٹ لاجز کے باہر میڈیا سے گفتگو کر رہے تھے کہ اس دوران پی ٹی آئی کارکنان وہاں جمع ہو گئے اور نعرے بازی شروع کر دی۔

جس کے بعد پی ٹی آئی کارکنوں اور مسلم لیگ ن کے رہنماوں میں ہاتھا پائی اور دھکم پیل ہوئی۔ پی ٹی آئی کارکنوں سے مسلم لیگ ن کے قائدین کی تلخ کلامی ہوئی اور پی ٹی آئی کارکن مصدق ملک کو دھکے دیتے رہے۔

ن لیگی رہنماؤں مصدق ملک اور شاہد خاقان عباسی نے مکوں اور لاتوں سے اپنا بچاؤ کیا۔

احسن اقبال حکومت مخالف نعرے لگا رہے تھے کہ اس دوران پی ٹی آئی کارکنان کی جانب سے ان کی جانب جوتا اچھالا گیا جو احسن اقبال کے سر پر لگا۔

پاکستان مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) والے دہشت گرد ہیں، عمران خان وزیر اعظم نہیں رہے۔

پارلیمنٹ لاجز کے باہر ن لیگی رہنماؤں اور پی ٹی آئی کارکنان کے تصادم کے بعد ان کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی والے بدمعاشی کررہے ہیں، ہمیں ان حرکتوں سے کوئی خوف نہیں ہے۔

ن لیگی رہنماوَں کی پریس کانفرنس کے دوران پی ٹی آئی کے کارکنوں نے ن لیگی رہنما مصدق ملک کو گھیر لیا تھا اور ان کے مابین دھکم پیل ہوئی تھی۔

احسن اقبال نے پی ٹی آئی کے خلاف نعرے لگائے جس دوران ان پر جوتا اچھالا گیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں