ایون فیلڈریفرنس: نواز شریف کے ساتھ دیگر لیگی رہنما بھی مشکلات کا شکار، مشورہ دینا مہنگا پڑ گیا

قومی احتساب بیورو ( نیب) نے ایون فیلڈریفرنس میں سابق وزیراعظم نواز شریف کی ضمانت منسوخی کی درخواست دائر کر دی۔

قومی احتساب بیورو ( نیب) نے ایون فیلڈریفرنس میں سابق وزیراعظم نواز شریف کی ضمانت منسوخی کی درخواست دائرکر دی، درخواست اسلام آباد ہائی کورٹ میں دائر کی گئی، نیب کی درخواست 14 صفحات پر مشتمل ہے۔

درخواست میں مؤقف اختیار کیا گیا کہ نواز شریف کو لیگی رہنماؤں کی جانے سے پاکستان نہ آنے کا مشورہ دیا گیا، جن رہنماؤں نے نواز شریف کو نہ آنے کا مشورہ دیا ان کے خلاف کارروائی کی جائے۔

درخواست میں کہا گیا کہ لیگی قیادت عدالتی احکامات کے خلاف ورزی کررہے ہیں، سابق وزیراعظم نواز شریف نے ضمانت کا غلط استعمال کیا، میاں نواز شریف نے سپریم کورٹ کے احکامات کی خلاف ورزی کی گئی۔

نیب کی جانب سے العزیزیہ اور فلیگ شپ ریفرنس میں بھی اپیلیں دائر ہیں۔

خیال رہے 19 ستمبر 2019 کو اسلام آباد ہائی کورٹ کے دو رکنی بینچ جسٹس اطہر من اللہ اور جسٹس میاں گل حسن اورنگ زیب نے مختصر فیصلے میں نوازشریف، مریم اور صفدر کی سزائیں معطل کرکے تینوں کی رہائی کا حکم دیا تھا۔

واضح رہے 6 جولائی کو احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے ایون فیلڈ ریفرنس کا فیصلہ سناتے ہوئے نواز شریف کو دس مریم نواز کو سات اور کیپٹن ر صفدر کو ایک سال کی سزا سنائی تھی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں