راولپنڈی کی 100 سالہ پرانی قدیمی امام بارگاہ تاریخی حیثیت کی حامل، اہم معلومات جانئے

راولپنڈی کی سو سالہ پرانی قدیمی امام بارگاہ تاریخی حیثیت رکھتی ہے۔ امام بارگاہ میں تمام علاقوں سے برآمد ہونے والے جلوس آکر اختتام پذیر ہوتے ہیں۔

قیام پاکستان سے بھی پہلے راولپنڈی کے علاقہ بنی میں تعمیر ہونے والی امام بارگاہ قدیمی گزشتہ سوسال سے عزادارانہ مظلوم کربلا کے لیے ایک عظیم درسگاہ کا کردار ادا کر رہی ہے۔

جڑواں شہروں راولپنڈی اوراسلام آباد کے مومنین عظام کے لیے بنائی گئی پہلی امام بارگاہ اس عرصہ میں دو دفعہ شہید ہوئی، مکمل طورپر لکڑی سے تیار کی گئی امام بارگاہ جل جانے کے بعد اب جدید حالت میں موجود ہے۔

امام بارگاہ میں آنے والے ہرطبقہ فکر سے تعلق رکھنے والے عقیدت مند اپنے دلی مراد پانے کے لیے منتیں مانتے ہیں اورمنتیں پوری ہونے پرشہزادہ علی اصغرؑ کا جھولا، شہنشاہ وفا حضرت عباسؑ کا علم اورشہزاد قاسمؑ کا سہرا بطورنظرونیاز پیش کرتے ہیں۔

امام بارگاہ قدیمی واحد امام بارگاہ ہے جہاں سے صرف دس محرم الحرام کو جلوس برآمد ہوتا ہے جبکہ باقی پورا سال مختلف علاقوں سے برآمد ہونے والے جلوس یہاں آکر اختتام پذیر ہوتے ہیں

 

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں