فنانشل ایکشن ٹاسک فورس اور نیشنل ایکشن پلان پرحکومت کی ضرورت پوری کریں گے، بلاول بھٹو

چیئرمین پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ فنانشل ایکشن ٹاسک فورس اور نیشنل ایکشن پلان پرحکومت کی ضرورت پوری کریں گے۔

اسپیکر اسد قیصرکی زیرصدارت قومی اسمبلی کے اجلاس میں اظہار خیال کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اپوزیشن اورحکومت کو اتفاق رائے سے قانون سازی کرنی ہوگی۔ درخواست ہےکہ قانون سازی سےمتعلق کمیٹی میں ان بلزکوبھیج دیں۔

اسپیکرقومی اسمبلی نے کہا کہ چیئرمین نادرا سے آج سابق فاٹا سے متعلق بات ہوئی۔ چیئرمین نادرا نے بتایا کہ سابق فاٹا میں سینٹر قائم کررہےہیں۔ ایک سینٹرمیں شناختی کارڈ،ڈومیسائل اور پٹوارخانےکی سہولت ہوگی۔

قومی اسمبلی میں وقفہ سوالات کے دوران وزیردفاعی پیداوار زبیدہ جلال نے کہا کہ دفاعی پیداواری صلاحیت بڑھانےکیلئےبہت سے اقدامات کیے گئے ہیں۔ پاکستان آرڈیننس فیکٹری واہ کی صلاحیت بہتربنانے کیلئےآسامیاں تخلیق کی گئیں۔

انہوں نے کہا کہ ڈی جی پروڈکشن اورڈی جی کمرشل کی آسامیاں تخلیق کی گئی ہیں۔ پی اوایف میں مشنری بہتربنانے کا فیصلہ کیاگیا ہے۔ پی اوایف آرڈیننس میں نظرثانی کی گئی ہے۔

زبیدہ جلال نے کہا کہ پی اوایف کی برآمدات بڑھانے کے لیے اقدامات کیے گئے ہیں۔ ہیوی انڈسٹریزٹیکسلا کے ماتحت ایک تجارتی کمپنی بنائی گئی۔ لڑاکاطیاروں کی انسپکشن ملک کےاندرکرکے زرمبادلہ بچایاگیا۔

اجلاس کے دوران فیصل مسجد تا روات اسلام آبادہائی وے سے متعلق لاگت کی تفصیلات ایوان میں پیش کی گئیں۔

وزارت داخلہ نے جواب میں کہا کہ زیروپوائنٹ سے کورنگ پل تک 13 کلومیٹرسڑک سگنل فری بنادیا گیا ہے۔ ایچ 8، آئی8، سوہان، کھنہ اورکورال انٹرچینج کی تعمیر پر 5ہزار150 ملین خرچ ہوچکے۔

وزارت داخلہ کے مطابق کورنگ پل اورپی ڈبلیوڈی انڈرپاس پرعملی کام اگست میں شروع ہوجائے گا۔ کورنگ پل اورپی ڈبلیوڈی انڈرپاس پر 1622 ملین لاگت آئےگی۔

تحریری جواب میں کہا گیا ہے کہ کورنگ پل سے روات تک 13 کلومیٹرسڑک نجی سرکاری شراکت داری کےتحت تعمیرکرنےکی تجویزہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں