چاند کے معاملے پر مفتی منیب نے فواد چوہدری سے اہم سائنسی سوال پوچھ لیا، نئی بحث چھڑ گئی

چاند کے معاملے پر پھر فواد چوہدری اور چیئرمین رویت ہلال کمیٹی آمنے سامنے آگئے۔

فوادچوہدری کے ٹوئٹ پر چیئرمین رویت ہلال کمیٹی مفتی منیب الرحمان کا ردعمل آ گیا۔

مفتی منیب الرحمان نے کہا ہے کہ چاند کے سائز سے تاریخ کا تعین فلکیات یاسائنس کی کونسی کتاب میں لکھا؟۔

جس شخص کو سائنس کا علم نہیں وہ خود کو سائنس کا امام پیش کر رہا ہے۔ فواد جی، یہ سائنس اور مذہب دونوں اعتبار سے پہلی کا چاند تھا۔

مفتی منیب الرحمان نے مزید کہاکہ قمری ماہ کی29 تاریخ کو چاند غروبِ آفتاب کے بعد موجود ہو مگر نظر نہ آئے تو مہینہ 30 کا ہوگا اور اگلی شام تک اس کی عمر 24 گھنٹے بڑھ جائے گی اس لیے نسبتاً بڑا نظر آئے گا۔

چیئرمین رویت ہلال کمیٹی کا کہنا تھا کہ یہ فواد چوہدری کی جہالت ہے جو اپنے آپ کو سائنس کا امام سمجھتےہیں، انہوں نے طمطراق سے گزشتہ شب چاند کو دیکھ کر کہا کہ عوام خود فیصلہ کرلیں۔

واضح رہے کہ وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے ذی الحج کے چاند سے متعلق دعویٰ کیا تھا کہ چاند 21 جولائی کو نظر آئے گا اور عید الاضحیٰ 31 جولائی کی ہوگی تاہم مرکزی رویت ہلال کمیٹی نے ملک بھر میں 21 جولائی کو چاند نظر نہ آنےکا اعلان کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں