بیٹے ارسلان کی اہلیہ ”بسمہ“ بھی منظر عام پر آ گئیں، ویڈیو پیغام میں ساس پر الزامات کی بوچھاڑ؟ جانیے تفصیلات

راولپنڈی کے علاقے صادق آباد میں نہایت ہی افسوسناک واقعہ پیش آیا، جس کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی ہے۔ جس میں بیٹا اپنی ماں پر تشدد کرتا دکھائی دیتا ہے۔

جس کے بعد تشدد کا نشانہ بننے والی ماں اور اس کی بیٹی کا بیان بھی سامنے آیا تاہم اب تشدد کرنے والے ارسلان کی اہلیہ کے موقف پر مبنی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہے۔

جس میں انہوں نے اپنی ساس اور بہو پر سنگین الزامات لگا دیئے ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق تشدد کرنے والے ارسلان کی اہلیہ نے ویڈیو بیان جاری کرتے ہوئے کہا کہ ”زوبیا میر “میرے شوہر کی سوتیلی بہن ہے ۔ یہ گزشتہ ڈیڑھ ہفتے سے پراپیگنڈہ جاری ہے۔

یہ گھر میرے شوہر کے نام پر ہے، انہوں نے جھوٹ لکھاہے کہ ہم گھر سے پراپرٹی کے دستاویزات اور پیسے لے کر بھاگ گئے ہیں۔ یا ہم نے پیسے چوری کیے ہیں۔ میں آپ کو ایک ایک ثبوت دوں گی اور تمام پراپرٹی کے دستاویز بھی اپ لوڈ کروں گی۔ گھر میرے شوہر محمد ارسلان کے نام پر ہے۔

رسلان کی اہلیہ جن کا نام سوشل میڈیا پر ” بسمہ “ بتایا جارہا ہے نے کہا کہ زوبیا میر پراپیگنڈہ کروا رہی ہے، کیونکہ وہ میری سوتیلی نند ہے، وہ میرے شوہر سے گھر لینا چاہتی ہے۔

میڈیا اگر میرے گھر آنا چاہتا ہے تو آئے میں آپ کو اپنا ایڈریس بتا دیتی ہوں۔ آپ آئیں اور دیکھیں کہ میری ساس کو ایک سٹیٹس تک بھی ڈالنا نہیں آتا اور یہ سب زوبیا ہی کر رہی ہے تاکہ وہ ہمارا گھر حاصل کر سکے ۔

ان کا کہناتھا کہ اتنی سوجھ بوجھ تو سب میں ہوتی ہے کہ ایک بچی اپنی ماں کو بچائے گیا یا پھر ویڈیو بنائے گی۔ ویڈیو پوری کیوں نہیں دکھائی گئی؟  پوری لڑائی کیوں نہیں دکھائی گئی۔

میں اب پوری ویڈیو اپ لوڈ کروں گی۔ زوبیا میر اوپر سے اپنے موبائل کا کیمرہ چلا کر آئی ۔ میرے شوہر نے اپنے ہوش اور حواس کھو کر ماں پر ہاتھ اٹھایا ہے ۔

خاتون کا کہناتھا کہ میں چھ ماہ کی حاملہ ہوں، میں اپنی الٹرا ساونڈ کی رپورٹ اپ لوڈ کروں گی، میری ڈیڑھ سال کی بیٹی ہے۔ انہوں نے مجھے مارا اور میرے جسم پر مخصوص حصوں پر حملہ کیا۔ میرے شوہر نے مجھے اور میری بچی کو بچانے کیلئے سب کچھ کیا ۔

 

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں