قابض بھارتی فوج کی مقبوضہ کشمیر میں دہشت گردی جاری، مزید دو نہتے نوجوان شہید

مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کی دہشت گردی جاری ہے، قابض فوج نے وادی میں آج مزید دو نہتے نوجوانوں کو شہید اور متعدد نوجوانوں کو گرفتار کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق مقبوضہ کشمیر کے علاقے کلگام میں بھارتی فورسز نے فائرنگ کرکے 2کشمیری نوجوان شہید کردیا، نوجوانوں کو نام نہاد سرچ آپریشن میں شہید کیا گیا۔

اس حوالے سے کشمیر میڈیا سروس کا کہنا ہے کہ بھارتی فورسز نے کلگام اور قریبی علاقوں کا محاصرہ کرلیا جبکہ بھارتی فوج نے گھروں میں گھس کرخواتین سے بدتمیزی بھی کی، محاصرے کے دوران متعدد نوجوانوں کو گرفتار کرلیا گیا۔

دوسری جانب حریت رہنما یاسین ملک کی اہلیہ مشال ملک کا کہنا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں مودی سرکار مسلم کش ایجنڈے پر کاربند ہے، بے گناہ کشمیری نوجوانوں کو بے دردی سے شہید کیا جا رہا ہے۔
انہوں نے کہا کہ دنیا اس وقت کروناوائرس کی زد میں ہے اور انسانی جانوں کو بچایا جارہا ہے جبکہ مودی سرکار کشمیری مسلمانوں کی نسل کشی میں مصروف ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ مودی حکومت مقبوضہ کشمیرمیں حالات کشیدہ کرنے میں مصروف ہے، مقبوضہ کشمیر میں عوام کروناوائرس سے متاثر ہے، ظلم چھپانے کیلئے ضلع کولگام میں انٹرنیٹ سروسز کو معطل کر دیاگیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں