قومی اسمبلی کے اراکین میں کورونا وائرس کی تشخیص، لیگی رکن اسمبلی بھی ہوگئے چوکنا

قومی اسمبلی کے اراکین محمود شاہ اور گل ظفر خان کی کورونا ٹیسٹ رپورٹ مثبت آگئی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ قومی اسبملی کے دونوں اراکین (محمود شاہ، گل ظفر خان) میں کورونا وائرس پایا گیا ہے، رپورٹ میں تصدیق ہوگئی، اراکین پارلیمنٹ سے ٹیسٹ کے لیے سیمپلز 8مئی کو لیے گئے تھے۔

ذرائع کے مطابق اراکین پارلیمنٹ کے سیمپلز این آئی ایچ کی خصوصی ٹیم نے لیے تھے، قومی اسمبلی اجلاس میں شرکت سے قبل کورونا ٹیسٹ لازمی قرار دیا گیا تھا۔ گل ظفر خان باجوڑ سے تحریک انصاف کے ایم این اے ہیں۔

دوسری جانب ذرائع نے یہ بھی انکشاف کیا ہے کہ پارلیمنٹ لاجز کے ایک اور چیمبراٹینڈنٹ میں کورونا کی تصدیق ہوگئی، کورونا سے متاثرہ چیمبر اٹینڈنٹ کی عمر 39سال ہے۔ پارلیمنٹ لاجز سے سامنے آنے والے کیسز کی تعداد3ہوگئی۔

ادھر اراکین پارلیمان کے کورونا ٹیسٹ کے نتائج جاری کردیے گئے ہیں۔ سینیٹر راجہ ظفر الحق اور مشاہد حسین سید کا کورونا ٹیسٹ منفی آیا۔ وفاقی وزیر غلام سرور خان اور سیدفخر امام کا بھی ٹیسٹ منفی رہا۔

اسی طرح مصطفی نوازکھوکھر، شاہ زین بگٹی، پی ٹی آئی کے پشاور سے ایم این اے نور عالم خان، ایم این اےنور عالم، سینیٹر سلیم ضیا، ستارہ ایاز، ملیکہ بخاری اور ڈاکٹر عائشہ غوث پاشا بھی مہلک وائرس سے محفوظ رہیں۔

لیگی رکن اسمبلی طاہرہ اونگزیب، معاونین خصوصی علی نواز اعوان، ملک امین اسلم، مریم اورنگزیب اور مائزہ حمید کے کورونا ٹیسٹ بھی منفی آئے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں