چوہدری برادران کی نیب کے اختیارات کیخلاف درخواست سماعت کے لیے منظور، چیئرمین نیب سمیت دیگر فریقین طلب

ہائی کورٹ نے چوہدری برادران کی چیئرمین نیب کے اختیارات کیخلاف درخواست سماعت کے لیے منظور کرتے ہوئے چیئرمین نیب سمیت دیگر فریقین سے 11مئی کو جواب طلب کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائی کورٹ میں چوہدری برادران کی چیئرمین نیب کے اختیارات کیخلاف درخواست پر سماعت ہوئی ، جسٹس سرداراحمدنعیم کی سربراہی میں 2رکنی بینچ نےکیس کی سماعت کی، اسپیکرپنجاب اسمبلی چوہدری پرویزالٰہی عدالت میں پیش ہوئے۔

عدالت نے چوہدری برادران کی درخواست سماعت کے لیے منظورکرلی اور چیئرمین نیب سمیت دیگرفریقین سے11مئی کو جواب طلب کرلیا ۔

چوہدری شجاعت اور چوہدری پرویز الہی نے لاہور ہائی کورٹ میں نیب کیخلاف دائر درخواست میں مؤقف اپنایا تھا کہ نیب سیاسی انجینئرنگ کرنیوالاادارہ ہے ، نیب کے کردار اور تحقیقات کے غلط انداز پر عدالتیں فیصلے بهی دے چکی ہیں۔

درخواست میں موقف اختیار کیا گیا تھا کہ چیئرمین نیب نے انیس سال پرانے معاملے کی دوبارہ تحقیقات کا حکم دیا ہے جبکہ نیب نے انیس سال قبل آمدن سے زائد اثاثہ جات کی مکمل تحقیقات کیں مگر ناکام ہوا ۔

درخواست میں کہا گیا تھا کہ چیئرمین نیب کو انیس سال پرانی اور بند کی جانیوالی انکوائری دوبارہ کهولنے کا اختیار نہیں، ہمارا سیاسی خاندان ہے اور ہمیں سیاسی طور انتقام کا نشانہ بنایا جاتا رہا ہے۔

چوہدری برادران کی جانب سے استدعا کی گئی تھی کہ نیب کا انیس برس پرانے آمدن سے زائد اثاثہ جات کی انکوائری دوبارہ کهولنے کا اقدام غیرقانونی قرار دیا جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں