ایڈیشنل اٹارنی جنرل عامررحمان نے چیف جسٹس سے متعلق بڑی بات کہہ دی، پاکستان میں ہلچل مچ گئی

چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ کے اعزاز میں دیئے گئے فل کورٹ ریفرنس میں جسٹس قاضی فائز عیسیٰ اور اٹارنی جنرل انور منصور نے شرکت نہیں کی ہےاور اس کی وجہ بھی سامنے آ گئی ہے ۔

جسٹس قاضی فائز عیسیٰ چھٹی پر ہونے کے باعث فل کورٹ ریفرنس میں شریک نہیں ہو سکے جبکہ اٹارنی جنرل انور منصور بھی بیرون ملک ہونے کے باعث شکرت نہیں کر سکیں ہیں ۔

چیف جسٹس کے اعزاز میں دیئے گئے فل کورٹ ریفرنس میں خطاب کرتے ہوئے ایڈیشنل اٹار نی جنرل نے کہا کہ جسٹس وقار سیٹھ کے فیصلے میں عداوت اور انتقام نظر آ تاہے ، خصوصی عدالت کا فیصلہ بنیادی حقو ق اور فوجداری نظام کے خلاف ہے فیصلے میں سزا پر عملدرآمد کا طریقہ غیر انسانی ہے۔

ایڈیشنل اٹارنی جنرل عامر رحمان کا کہناتھا کہ آرٹیکل 10 اے میں شواہد کے اصولوں کو نظر انداز کیا گیا ، بھاری دل سے کہتاہوں کہ چیف جسٹس نے مختصر فیصلے کی حمایت کی ، چیف جسٹس نے فیصلے کی حمایت صحافیوں سے گفتگو میں کی ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں