پاکستان فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کی گرے لسٹ سے نکلنے کے لیے متحرک، تہلکہ خیز رپورٹ تیار

پاکستان فنانشل ٹاسک فورس کی گرے لسٹ سے نکلنے کیلئے سرگرم، ابتدائی جائزہ کیلئے حتمی رپورٹ تیار کر لی گئی۔

ایف اے ٹی ایف سات دسمبر کوپاکستان کی رپورٹ کا ابتدائی جائزہ لے گا۔ پاکستان فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کی گرے لسٹ سے نکلنے کے لیے متحرک، ایف اے ٹی ایف کو مطمئن کرنے کے لیے اقدامات پر مفصل رپورٹ تیار کر لی گئ ہے۔ ذرائع کے مطابق رپورٹ میں منی لانڈرنگ کے خلاف اقدامات شامل ہیں۔پاکستان نے دہشت گردوں تک رقوم، اثاثے اور زیورات کی منتقلی روکنے کے اقدامات سے آگاہ کیا گیا ہے، ذرائع کے مطابق رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ اب تک دہشت گردوں تک رقوم پہنچانے کے 700 کیسز کی تحقیقات کیں،اسی طرح سےکالعدم تنظیموں تک رقوم پہنچانے والے 190 افراد کے خلاف کارروائی کی جاچکی ہے۔
رپورٹ کے مطابق دہشت گردوں تک رقوم پہنچانے والوں کے خلاف گھیرا تنگ کیا گیا ہے جبکہ دہشت گردوں تک رقوم پہنچانے پر 170افراد بھی دھر لیےگئے ہیں۔ تیار شدہ رپورٹ کے مطابق پاکستان نے کالعدم تنظیموں کی1000جائیدادیں ضبط کیں ہیں۔
پینتیس جائیدادوں کے مالکان کے خلاف تحقیقات جاری ہیں۔پاکستان مزید 150 قیمتی جائیدادوں کی تحقیقات بھی کررہا ہے۔ رپورٹ کے مطابق کرنسی اسمگلنگ کے خلاف ایکشن میں 220 فی صد اضافہ ہوا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں