جتنے پیسوں کا الزام لگایا، 15 فیصد مجھے دے، خورشید شاہ نے میڈیا سے گفتگو میں ایسی کیا بات کی آپ بھی جانیے

قومی احتساب بیورو(نیب) کی زیرحراست پاکستان پیپلزپارٹی کے رہنما خورشید شاہ کا کہنا تھا کہ جتنے پیسوں کا مجھ پر الزام لگایا، نیب 15 فیصد مجھے دے اور باقی خود رکھ لے۔

گزشتہ روز نیب کی حراست میں پیپلز پارٹی کے رہنما خورشید شاہ کی طبیعت خراب ہوئی تھی جس کے بعد انہیں پولی کلینک اسپتال منتقل کیا گیا تھا۔

ذرائع کے مطابق خورشید شاہ کو سانس اور معدے کی تکلیف برقرار ہے جب کہ انہیں بلڈ پریشر اور شوگر کنٹرول کرنے میں بھی دشورای کا سامنا ہے۔
خوشید شاہ کو اسپتال میں ایک رات رکھنے کے بعد انہیں اب ڈسچارج کیا گیا ہے۔

اس موقع پر خورشید شاہ کا میڈیا سے گفتگو میں کہنا تھا کہ نیب نے جتنے پیسوں کا الزام لگایا، اتنا تو پاکستان کا بجٹ نہیں ہے، نیب صرف 15 فیصد مجھے دے اور باقی خود رکھ لے۔

انہوں نے کہا کہ ظاہر شدہ جائیداد سے ایک انچ بھی اضافی پراپرٹی ان کے پاس نہیں ہے، چیف جسٹس پاکستان سے نیب کی گرفتاریوں پر نوٹس لینے کا مطالبہ کرتا ہوں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں