پاکستانی خبریں

ٹنشن ختم، سولر سسٹم خریدنے کیلئے اب حکومت پیسے دے گی

سندھ حکومت نے متوسط طبقے کے لوگوں کو سولر سسٹم لگانے کے لیے بلاسود آسان قرض فراہم کرنے کا اعلان کیا ہے۔

سندھ کے سینیئرصوبائی وزیر ناصر حسین شاہ نے کہا ہے کہ 30 لاکھ گھروں میں بجلی نہیں ہے ، انتہائی غریب گھرانوں کو پہلے سولر سسٹم فراہم کریں گے۔

سکھر میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ناصر حسین شاہ نے کہا کہ، بجٹ میں کوشش کی گئی ہے کہ عام آدمی کا خیال رکھا جائے۔

انہوں نے کہا کہ الیکشن کے دوران بلاول بھٹو زرداری نے جو وعدے کیے انہیں پورا کرنے جارہے ہیں، مفت بجلی سے متعلق اور پینے کے صاف پانی کے لیے منصوبے تیار کیے ہیں۔

ناصر حسین شاہ کا کہنا تھا کہ 30لاکھ گھروں میں بجلی نہیں، انہیں پہلے بجلی فراہم کریں گے، انتہائی غریب گھرانوں کو ایک پنکھا اور 3 بلب جلانے کے لیے پہلے سولر سسٹم فراہم کریں گے۔

ناصر حسین شاہ کا کہنا تھا کہ متوسط طبقےکو بھی سپورٹ کرنےکے لیے لائحہ عمل ترتیب دیا جارہا ہے، متوسط طبقے سے جو خاندان خود سولر سسٹم لگاناچاہیں ان کے لیےقرض اسکیم بنارہے ہیں، سولر سسٹم کے لیےقرض کا سود سندھ حکومت ادا کرے گی۔

ان کا کہنا تھا کہ پیپلزپارٹی کو وفاقی بجٹ پر تحفظات ہیں، سندھ کےساتھ گزشتہ دہائی میں کتنی بڑی زیادتی کی گئی ہے، دوسرے صوبوں میں کھربوں روپے میں کام ہوئے، سندھ کو دو تین فیصد سےزیادہ پی ایس ڈی پی میں حصہ نہیں دیاگیا۔

ناصر حسین شاہ نے کہا کہ کراچی کے لیےجوبجٹ مختص ہے اس میں اربوں روپےکےکام ہورہے ہیں۔

وفاقی بجٹ کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ امید ہے کہ جب بجٹ پاس ہوگا تو پیپلز پارٹی کی سفارشات پرٹیکس کی شرح کم ہوگی۔

ناصر حسین شاہ نے کہا کہ اپوزیشن کی جانب سے احتجاج ملکی مسائل کا حل نہیں، بانی پی ٹی آئی کا المیہ ہےکہ ہر بات ان کی ذات تک گھومتی ہے، امیدکرتےہیں بانی پی ٹی آئی جیل سےکچھ سیکھ کر آئیں گے۔

ناصر حسین شاہ نے کہا کہ عید پر شہدا کی قربانیوں کو یادرکھنا چاہیے۔

Related Articles

Back to top button