پاکستانی خبریں

بیرسٹر گوہر کے بیان پر وزیر قانون اعظم نذیر تارڑ کا ردعمل

وفاقی وزیر قانون سینیٹر اعظم نذیر تارڑ نے پی ٹی آئی رہنما بیرسٹر گوہر کے بیان پر ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ ججوں کے معاملے پر پی ٹی آئی رہنماؤں کے بیانات سپریم کورٹ کے ازخود نوٹس کو سیاست کی نظر کرنے کی مذموم کوشش ہے۔

اعظم نذیر تارڑ نے کہا کہ بیرسٹر گوہر خود وکیل ہیں، انہیں علم ہونا چاہیے کہ 184 (3) کے تحت بینچ کی تشکیل کی گئی ہے، فل کورٹ نے ہی اعلامیہ جاری کیا تھا جس میں تحقیقات کا کہا گیا تھا۔

پاکستان تحریک انصاف کے رہنما بیرسٹر گوہر خان نے کہا تھا کہ بانی پاکستان تحریک انصاف عمران خان نے مطالبہ کیا کہ چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ کے ججوں کے معاملے پر فل کورٹ بنائیں کیونکہ عدلیہ مکمل طور پر آزاد ہونی چاہیئے۔

جس پر ردعمل دیتے ہوئے اعظم نذیر تارڑ نے کہا کہ چیف جسٹس اور سینئر ججز کی کمیٹی کی صوابدید ہے کہ وہ کس معاملے پر کون سا بینچ تشکیل دیں۔

وزیر قانون نے کہا کہ پی ٹی آئی اور اس کے بانی کا کہا قانون نہیں، آئین پر عمل ہوگا، اپنے دور میں ججوں کے خلاف ریفرنس بنانے والے مشورے نہ دیں تو بہتر ہوگا۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ عدلیہ کی آزادی سے متعلق اہم معاملے پر سیاست نہ کرنا ہی ملک اور عدلیہ کے لئے اچھا ہے۔

Related Articles

Back to top button