بین الاقوامی

سابق امریکی سیکریٹری آف اسٹیٹ کولن پاول انتقال کر گئے

افغان اور عراق جنگ میں سیکریٹری آف اسٹیٹ کے فرائض انجام دینے والے کولن پاول 84سال کی عمر میں کووڈ۔19 کا شکار ہو کر انتقال کر گئے۔

امریکی تاریخ کے پہلے سیاہ فارم سیکریٹری آف اسٹیٹ کولن پاول کے اہلخانہ نے تصدیق کی کہ ان کا انتقال کووڈ۔19 کے سبب پیدا ہونے والی پیچیدگیوں کی وجہ سے ہوا۔

پیر کو ان کے اہلخانہ نے میڈیا میں جاری بیان میں کہا کہ ہم اپنے بہترین شوہر، والد، دادا اور ایک عظیم امریکی سے محروم ہو گئے۔

امریکی فوج کے سابق فور اسٹار جنرل کولن پاول اور سابق چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف نے چار امریکی صدور کے لیے خدمات انجام دیں اور سیاسی منظرنامے اور طاقت کے ایوانوں میں ایک اہم اثاثہ تصور کیے جاتے تھے۔

جمیکا میں پیدا ہونے والے کولن پاول کو امریکی صدر جیارج ڈبلیو بش نے 2000 میں سیکریٹری آف اسٹیٹ بنانے کا اعلان کرتے ہوئے کہا تھا کہ جنرل پاول ایک سیاسی ہیرو، بے مثال امریکی اور امریکا کے لیے عظیم مثال ہیں۔

انہوں نے کہا تھاکہ تقریر کی صلاحیت، اعلیٰ ساکھ، جمہوریت کے لیے انتہائی احترام اور بحیثیت سپاہی فرض شناسی کے احساس جیسی صلاحیتوں کا جس طرح سے کولن پاول نے مظاہرہ کیا ہے وہ انہیں اس ملک کے تمام لوگوں کا عظیم نمائندہ بنائے گا۔

البتہ فروری 2003 میں اقوام متحدہ میں اپنی تقریر کے دوران عراق میں تباہ کن ہتھیاروں کی موجودگی کا الزام لگا کر جنگ کی راہ ہموار کرنے والے سیکریٹری آف اسٹیٹ کے لیے اس جنگ کے بعد حالات انتہائی ناساز ہو گئے تھے کیونکہ بعدازاں عراق میں ان ہتھیاروں کی موجودگی کے دعوے جھوٹے ثابت ہوئے تھے۔

2005 میں انٹرویو کے دوران اس حوالے سے کولن پاول نے ندامت کا اظہار کرتے ہوئے کہا تھاکہ یہ ایک داغ ہے اور میرے ریکارڈ کا حصہ رہے گا، یہ انتہائی تکلیف دہ ہے۔

Related Articles

Back to top button