بین الاقوامی

سعودی عرب آنے والوں کے لیے کونسی ویکسین ضروری ہے؟

سعودی عرب آنے والوں کے لیے کونسی ویکسین ضروری ہے؟ غیرملکیوں کے ویکسین سے متعلق ‏سوالات پر سعودی فوڈ اینڈ ڈرگ اتھارٹی نے جواب دے کر ابہام دور کر دیے۔

شہری کی جانب سے سوال پوچھا گیا تھا کہ کیا سعودی عرب نے چین کی سائینوفارم ویکسین کے ‏استعمال کی منظوری دے دی ہے؟

سوال کے جواب میں سعودی فوڈ اینڈ ڈرگ اتھارٹی نے واضح کیا ہے کہ سائینوفارم ویکسین کی ‏منظوری کی اطلاع نہیں ہے۔

اتھارٹی نے کہا کہ سعودی عرب آنے والوں کیلئے تاحال کورونا کی 4 ویکسینز کی منظوری دی گئی ‏ہے جن میں فائزر، آسٹرا زینیکا، موڈرنا اور جانسن اینڈ جانسن شامل ہیں۔

اتھارٹی کا کہنا ہے کہ سعودی عرب میں 2 طرح کی ویکسین لگائی جا رہی ہے، سعودی شہریوں اور ‏مقیم غیرملکیوں کو فائزر اور آسٹرازینیکا لگائی جا رہی ہے۔

پاکستان میں تعینات سعودی سفیر نواف بن سعید المالکی نے حج وعمرہ کے لیے چین کی ویکسین ‏کو اپنی لسٹ میں شامل کرنے کی یقین دہانی کرا دی۔

وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ اور سعودی سفیر نواف بن سعید المالکی کے درمیان ملاقات ہوئی اس ‏موقع پر کوروناوائرس، ویکسینیشن اور دیگر امور سے متعلق تبادلہ خیال کیا گیا۔

مراد علی شاہ نے سعودی سفیر سے مطالبہ کیا کہ پاکستانی عازمین حج کے لیے چینی کورونا ‏ویکسین کو قبول کیا جائے، پاکستان میں شہریوں کو زیادہ تر چین کی ویکسین لگائی جارہی ہے، ‏سعودی عرب نے حج اور عمرہ پر آنے والوں کے لیے چینی ویکسین شامل نہیں کی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ چینی ویکسین شامل نہ ہونے سے پاکستانی عوام میں مایوسی پیدا ہوئی۔

وزیراعلیٰ سندھ نے مزید کہا کہ چین کی ویکسین لگوانے والے عازمین حج کو اجازت دی جائے، ‏چینی ویکسین عالمی ادارہ صحت(ڈبلیو ایچ او) کی طرف سے منظور شدہ ہے۔

سعودی سفیر نے یقین دہانی کرائی کہ چین کی ویکسین کواپنی لسٹ میں شامل کرائیں گے۔

Related Articles

Back to top button