اداروں کو رابطہ مہم کی اجازت، اقاموں سے متعلق سعودی حکومت کا بڑا قدم

اداروں کو رابطہ مہم کی اجازت، اقاموں سے متعلق سعودی حکومت کا بڑا قدم

سعودی عرب میں اقاموں کے سہ ماہی اجرا اور تجدید کے فیصلے پر عمل درآمد کرانے کے لیے حکومت کا اہم اقدام سامنے آیا، 5 اداروں کو رابطہ مہم کی اجازت دے دی گئی۔

سعودی وزیرداخلہ سہ ماہی اقاموں کے اجرا و تجدید پر عمل درآمد کی تاریخ متعین کریں گے، اسی ضمن میں پانچ اداروں کو رابطہ مہم کے لیے گرین سگنل دیا گیا ہے جو متعلقہ انتظامیہ سے بات چیت کرکے مذکورہ فیصلے سے متعلق لائحہ عمل تیار کریں گے۔

اقاموں کی سہ ماہی اجرا اور تجدید پر عمل درآمد متعلقہ اداروں کے باہمی اتفاق سے ہوگا جن میں وزیر افرادی قوت و سماجی بہبود اور سعودی ڈیٹا اینڈ آرٹیفیشل انٹیلی جنس اتھارٹی (سدایا) کے سربراہ کی رضامندی ضروری ہے۔ جبکہ وزیرداخلہ اس پالیسی کے نفاذ کیلئے تاریخ متعین کریں گے۔

فیصلے پر عمل درآمد مرحلہ وار بھی ہوسکتا ہے تاہم اب تک کوئی حتمی اعلان سامنے نہیں آیا۔

یاد رہے کہ رواں سال کے پہلے ماہ سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز کی زیرصدارت کابینہ کا اجلاس ہوا تھا جس میں اقامے کی سہ ماہی اجرا اور تجدید کی منظوری دی گئی تھی۔

یہ سہولت صرف ورک پرمٹ اقامہ ہولڈرز کے لیے ہوگی، اس کا اطلاق گھریلو عملہ اور وہ تمام ملازمین جو اس کے دائرے میں آتے ہیں ان پر نہیں ہوگا۔ کابینہ کے فیصلے کے تحت ورک پرمٹ فیس، اقامہ فیس اور مقابل مالی کی قسطوں میں وصولی کی جائے گی، اس سے قبل یہ یکمشت ہوتا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں