گستاخانہ خاکوں کی اشاعت پر اقوام متحدہ کا گہری تشویش کا اظہار

گستاخانہ خاکوں کی اشاعت پر اقوام متحدہ کا گہری تشویش کا اظہار

اقوام متحدہ کے انتہا پسندی کے خلاف ادارے نے پیغمبر اسلام کے گستاخانہ خاکوں کی اشاعت سے پیدا ہونے والی کشیدگی پر گہری تشویش کا اظہار کیا ہے۔

ادارے کا کہنا ہے کہ مذاہب اور مذہبی علامات کی تذلیل سے نفرت اور انتہا پسندی پھیلتی ہیں۔

عالمی ادارے کے اس پلیٹ فارم کا نام اقوام متحدہ کے زیر اہتمام تہذیبوں کا اتحاد ہے جس کے سربراہ میگوئل موراٹینوس کا کہنا ہے کہ مختلف مذاہب کے پیرو کاروں اور مختلف سیاسی نظریات کے حامل گروپوں کے مابین باہمی احترام‘ ناگزیر ہے۔

وزیر اعظم عمران خان بھی جنرل اسمبلی کے خطاب میں انہیں خیالات کا اظہار کر چکے ہیں۔

میگوئل موراٹینوس نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ فرانس میں پیغمبر اسلام کے خاکوں کی اشاعت کے بعد سے جو کشیدگی اور تناؤ مسلسل بڑھتے جا رہے ہیں، تہذیبوں کے اتحاد‘ کو اس پر گہری تشویش ہے۔

انہوں نے کہا کہ اس عمل سے پرتشدد واقعات کو مزید ہوا ملی ہے اور اس تشدد کا نشانہ ایسے معصوم اور عام شہری بنے، جن کا قصور ان کا مذہب، عقیدہ یا ان کی نسلی پہچان تھی۔۔۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں