مغربی ادویہ ساز کمپنیوں کے خلاف عدم اعتماد کا اظہار، کورونا ویکسین نا خریدنے کا فیصلہ

فلپائن کے صدر روڈریگو ڈوور نے مغربی ادویہ ساز کمپنیوں کے خلاف عدم اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ ان سے کورونا ویکسین نہیں خریدیں گے۔

فلپائنی صدر روڈریگو ڈوور نے دوٹوک مؤقف اختیار کیا ہے کہ اپنے ملک کے لیے روس اور چین کے علاوہ کسی بھی ملک سے ویکسین نہیں خریدیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ مغربی فارما پیسے کی بچاری ہیں، یہ کمپنیاں منافع خوری کرنا چاہتی ہیں، فلپائن کسی دوسرے ملک کے بجائے ماسکو اور بیجنگ حکومت سے کورونا وائرس کی ویکسین کی خریداری کو ترجیح دے گا۔

صدر نے مزید کہا کہ مغرب کی تمام ادویہ ساز کمپنیاں منافع خور ہیں۔

یاد رہے کہ رواں سال اگست میں فلپائن اور روس کے درمیان معاہدہ طے پایا، جس کے تحت روس کرونا ویکسین کی بڑی مقدار میں خوراکیں فلپائنی حکومت کے حوالے کرے گا تاکہ اس کا استعمال کورونا کے خلاف یقینی بنایا جاسکے۔

اپنے ایک بیان میں فلپائنی صدر کا کہنا تھا کہ اپنے ملک کے شہریوں پر روس کی تیار کردہ کورونا ویکسین کے استعمال سے قبل ویکسین ٹیسٹ کے لیے مجھ پر لگائی جائے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں