ایسا کیا ہوا کہ ٹرمپ نے اپنے ہی نقادوں کو تنقید کا نشانہ بنا ڈالا؟ اہم وجہ سامنے آگئی

امریکی صدر ٹرمپ کا کہنا ہے کہ اگر کوئی شخص ان پر کتاب لکھنا چاہے تو اس کے لیے لازم ہو چکا ہے کہ وہ ان سے متعلق جتنا خراب مواد لکھ سکتا ہو، لکھے کیونکہ خراب مواد کا بیش تر حصہ جھوٹ پر مبنی ہوتا ہے۔

صدر ٹرمپ نے اپنے نقادوں کو ایک بار پھر سوشل میڈیا پر تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ اگر کوئی شخص کہے کہ صدر ٹرمپ عظیم ہے تو اسے سی این این یا MSDNC میں نوکری نہیں ملے گی، اس کا چانس زیرو ہو گا۔

انہوں نے اپنے بیان میں جان بولٹن کو نالائق جنگ باز قرار دیا جب کہ معروف صحافی بوب ووڈورڈ کو سماجی دھوکے باز قرار دیا ہے۔

صدر ٹرمپ نے اپنی بھتیجی کو بھی نشانہ بنایا جنہوں نے ان پر حال ہی میں کتاب لکھی ہے، ٹرمپ نے کہا کہ ان کی بھتیجی غیر مستحکم شخصیت کی مالک ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ان کی بھتیجی کا ساری عمر مضحکہ اڑایا گیا، اس بھتیجی کو تو اس کے دادا بھی پسند نہیں کرتے تھے جبکہ وہ خاصے رحم دل اور خیال رکھنے والے انسان تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں