جنازے میں خودکش حملہ، 25 افراد جاں بحق، درجنوں زخمی

افغان صوبہ ننگرہار ایک بار پھر خود کش دھماکے سے گونج اٹھا، جنازے میں خود کش حملے کے نتیجے میں 25 افراد جاں بحق اور 55 سے زائد افراد شدید زخمی ہوگئے۔

ننگرہار حکومت کے ترجمان آیت اللہ خوگانی نے حملے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ دھماکے کے نتیجے میں کئی زخمیوں کی حالت تشویش ناک ہے، اموات میں اضافہ ہوسکتا ہے۔

افغانستان میں ایک ہی دن دہشت گردانہ حملے کے دو واقعات پیش آئے۔ دوسری جانب کابل کے مغرب میں سرکاری میٹرنٹی ہوم پر دہشتگردوں نے فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں خواتین اور بچوں سمیت 5 افراد جاں بحق ہوئے۔

حکام کا کہنا ہے کہ 3دہشت گردوں نے اسپتال پرحملہ کیا جبکہ سیکیورٹی فورسز کی جوابی کارروائی میں تینوں شدت پسند مارے گئے، سیکورٹی فورسز نے اسپتال کو کلیئر کردیا۔

میٹرنٹی ہوم سے 80 بچوں اور خواتیں کو بحفاظت باہر نکال لیا گیا ہے۔

 غیرملکی میڈیا کے مطابق حملے کی ذمے داری تاحال کسی شدت پسند گروہ نے قبول نہیں کی البتہ یہ امکان ظاہر کیا جارہا ہے کہ حملہ طالبان کی جانب سے ہوسکتا ہے کیوں کہ اس سے قبل بھی متعدد ایسے حملے کیے جاچکے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں