چین میں کرونا وائرس نے بجا دی خطرے کی گھنٹی، سینکڑوں متاثر

چین میں کرونا وائرس نے خطرے کی گھنٹی بجا دی مزید دو سو افراد متاثر ہوئے،، جبکہ تین افراد وائرس کی زد میں آکر لقمہ اجل بن گئے،، عالمی ادارہ صحت کے مطابق چین میں کرونا وائرس تیزی سے پھیل رہا ہے۔

چین میں کرونا وائرس سے نمونیا اور سارس نامی سانس کی بیماری کے نئے کیسز سامنے آ گئے جس کے بعد اس مرض سے متاثرہ افراد کی مجموعی دو سو سے زائد ہو گئی ۔اب تک مرض سے متاثرہ تین افراد ہلاک ہوچکے ہیں،، جب کہ متعدد افراد کی حالت تشویشناک بتائی جا رہی ہے۔

چین میں چونکہ نئے قمری سال کی تقریبات جاری ہیں۔ اس موقع پر لاکھوں افراد اندرون ملک ایک شہر سے دوسرے شہر کا سفر کرتے ہیں اس لیے حکام کو یہ پریشانی لاحق ہے کہ کہیں مریضوں کی تعداد میں مزید اضافہ نہ ہو جائے۔

چین کے وسطی شہر ووہان میں اب تک سب سے زیادہ کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ووہان میونسپل ہیلتھ کمیشن کی جاری کردہ معلومات کے مطابق ایک سو ستر مریض زیر علاج ہیں نئے مریضوں کو بخار اور کھانسی کی شکایات تھیں جو اس مریض کی علامات میں سرفہرست سمجھی جاتی ہیں۔

امریکا میں ووہان سے آنے والے مسافروں میں مرض کی تشخیص کے لیے تین ایئر پورٹس پر اسکریننگ شروع کر دی گئی،،چین کے علاوہ جاپان اور تھائی لینڈ میں وائرس سے متاثرہ افراد میں اس مرض کی تشخیص ہوئی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں