یو اے ای میں ہوئی انوکھی واردات، پیٹ سے سینکڑوں ہیرے برآمد

اماراتی کسٹم حکام نے پیٹ میں ہیرے چھپا کر اسمگلنگ کی کوشش ناکام بناتے ہوئے افریقی شہری کو گرفتار کرلیا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق متحدہ عرب امارات کی ریاست شارجہ ایئرپورٹ پر کسٹمز حکام نے اس افریقی اسمگلر کو رنگے ہاتھوں گرفتار کرکے ہیرے برآمد کیے تھے۔

کسٹمز حکام کو پہلے ہی ہیروں کی اسمگلنگ سے متعلق خفیہ اطلاعات موصول ہوچکی تھیں، جس کے بعد اماراتی حکام نے ہوائی اڈو، بندگاہوں اور بّری کسٹم چوکیوں کو ہائی الرٹ کردیا تھا اور افریقہ سے آنے والے تمام مسافروں پر نظر رکھی جارہی تھی۔

خفیہ اطلاع کے مطابق ایک بڑے کاروباری شخص نے بڑی مقدار میں ہیرے اسمگل کرنے تھے تاہم پیشگی اطلاعات کے باعث ملزم کو شناخت کرکے گرفتار کرنے میں آسانی ہوگئی۔

میڈیا کے مطابق ایئرپورٹ حکام نے ملزم کو طیارے سے اترتے ہی حراست میں لے کر کسٹمز حکام کے حوالے کردیا تھا تاہم ملزم کی تلاشی کے باوجود اس کے سامان سے کچھ برامد نہ ہوا لیکن ہیروں کی اسمگلنگ سے متعلق مصدقہ اطلاعات تھی کہ وہ ہی ہیرے اسمگل کرے گا۔

حکام نے ملزم کا میڈیکل چیک اپ کرایا تو الٹرا ساوٓنڈ کے ذریعے معلوم ہوا ملزم کے پیٹ میں تین پلاسٹک کی تھیلیاں موجود ہیں جب میڈیکل عملے نے وہ تھیلیاں باہر نکالیں تو معلوم ہوا کہ ان میں خام ہیرے موجود تھے۔

خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ پیٹ سے برآمد ہونے والے 297 گرام ہیروں کی مالیت 90 ہزار امریکی ڈالر بتائی گئی ہے، ملزم ہیرے متحدہ عرب امارات اس لیے لایا تھا تاکہ اسے اچھی قیمت میں فروخت کرسکے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں