کاروباری خبریں

نیپرا نے بجلی کی قیمت میں کمی کی منظوری دے دی

نیشنل الیکٹرک پاور ریگولیٹری اتھارٹی (نیپرا) نے بجلی کی قیمت میں 28 پیسے کمی کی منظوری دے دی ہے۔نیپرا ہیڈ کوارٹرز میں مئی کی فیول ایڈجسٹمنٹ سے متعلق درخواست پر سماعت ہوئی۔

نیپرا نے مہنگے پاور پلانٹس سے پیداوار پر سوال اٹھاتے ہوئے نیشنل پاور کنسٹرکشن کارپوریشن (این پی سی سی) حکام سے پوچھا کہ مئی میں فرنس آئل اور ڈیزل سے بحلی پیدا کیوں کی؟

این پی سی سی حکام نے جواب دیا کہ مائع گیس (ایل این جی) کی کم دستیابی کے باعث ایسا کرنا پڑا، مئی میں یومیہ 140 ایم ایم سی ایف ڈی گیس کی کمی کا سامنا رہا۔

چیئرمین نیپرا نے کہا کہ ناقص سسٹم اور سستے پلانٹس کو استعداد سے کم چلانے سے بھی پیداواری لاگت میں اضافہ ہوا، سسٹم میں نقائص کو دور کرنا این ٹی ڈی سی کی ذمہ داری ہے، آپ کی وجہ سے پورا پاکستان کیوں متاثر ہو؟

این ٹی ڈی سی حکام نے مؤقف اپنایا کہ کورونا وائرس کی وجہ سے سسٹم میں نقائص کو دور کرنے میں تاخیر ہوئی۔

اس پر چیئرمین نیپرا نے کہا کہ کورونا کو تو ایک سال سے زیادہ ہو گیا، آپ کے جواب سے مطمئن نہیں۔

(نیپرا) نے بجلی کی قیمت میں 28 پیسے کمی کی منظوری دی۔ قیمت میں کمی سے صارفین کو آئندہ ماہ کے بلز میں تین ارب ساٹھ کروڑ روپے کا ریلیف ملے گا۔ اس فیصلے کا اطلاق لائف لائن اور کے الیکٹرک صارفین پر نہیں ہوگا۔

Related Articles

Back to top button